پی ٹی آئی نے مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی کے خلاف فارن فنڈنگ کیس دائر کردیئے

0

اسلام آباد : پاکستان تحریک انصاف نے ن لیگ اور پیپلزپارٹی کے خلاف بھی الیکشن کمیشن میں فارن فنڈنگنز کے حوالے سے کیسز دائر کر دیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے بعد ن لیگ اور پیپلزپارٹی کے خلاف بھی الیکشن کمیشن میں فارن فنڈنگنز کے حوالے سے کیسز دائر کر دیے گئے، نواز لیگ اور پیپلزپارٹی کے خلاف پی ٹی آئی کے رہنما فرخ حبیب نے الیکشن کمیشن میں درخواستیں دائر کیں۔

جن میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ ان دونوں بڑی جماعتوں نے بیرون ملک ممنوعہ ذرائع سے بھاری رقوم حاصل کیں اور کاغذات نامزدگی میں ان ذرائع کو بھی خفیہ رکھا گیا۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ دونوں جماعتوں کی جمع کروائی گئی تمام اکاونٹ تفصیلات میں سقم ہیں، فارن فنڈنگ دونوں پارٹیوں کو بھی ہورہی ہے لہذا الیکشن کمیشن پیپلزپارٹی اور ن لیگ کی چھپائی گئی تفصیلات کی جانچ پڑتال کرے۔

تحقیقات ہوئیں توپتہ چلےگا کہ کس طرح ن لیگ، پی پی نے منی لانڈرنگ کی،فرخ حبیب 

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فرخ حبیب کا کہنا تھا کہ دونوں جماعتوں کی فارن فنڈنگ کی درخواست جمع کرائی ہے، تحقیقات ہوئیں توپتہ چلےگا کہ کس طرح ن لیگ، پی پی نے منی لانڈرنگ کی ہے۔

پی ٹی آئی کی رہنما نے کہا کہ ملک سےلوٹی ہوئی رقم ہنڈی کےذریعےملک سےبھیجی گئی، ن لیگ نےایک ارب20کروڑ کی انتخابی مہم چلائی، لگتا ہےاسحاق ڈار خود ہی اکاؤنٹس کا آڈٹ کرتےہیں، پیپلزپارٹی نے امریکا میں اپنی کمپنی رجسٹرکرائی ہوئی ہے۔

انھوں نے مطالبہ کیا کہ باقی جماعتوں کے اکاونٹس کی بھی ویسے ہی سکروٹنی ہونی چاہیے جیسے پی ٹی آئی کی ہوئی ہے، اب دیکھتے ہیں الیکشن کمیشن کتنی تیزی سے اس معاملے کو دیکھتا ہے۔

فرخ حبیب نے مزید کہا کہ عمران خان26اکتوبرکوالیکشن کمیشن میں پیش ہوں گے، عمران خان قانون کی پاسداری پریقین رکھتےہیں ،عمران خان سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن سے سرخروہوں گے۔

یاد رہےکہ پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کیخلاف فارن فنڈنگ کیس زیر سماعت ہے ، حنیف عباسی نے اپنی درخواست میں الزام لگایا تھا کہ عمران خان نے الیکشن کمیشن میں جمع کرائی گئی اثاثوں کی تفصیلات میں اپنی آف شور کمپنی ‘نیازی سروسز لمیٹڈ’ سے متعلق معلومات نہ دے کر انکم ٹیکس آرڈیننس 1979 کی خلاف ورزی کی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF  Email

Share.

About Author

Leave A Reply