فرار دہشت گردوں نے افغانستان میں پناہ گاہیں بنا لیں، میجر جنرل حسن اظہر

0

رالپنڈی: میجر جنرل حسن اظہر نے کہا ہے کہ شمالی وزیرستان میں کوئی نوگو ایریا نہیں رہا، پاکستان سے فرار ہونے والے دہشتگردوں نےافغانستان میں کمین گاہیں بنالی ہیں، آپریشن ضرب عضب کے دوران 2 ہزار 873 دہشت گرد مارے گئے جبکہ 972 زخمی اور 1777 شدت پسند گرفتار کیے گئے۔

پاک فوج کے تعلقات عامہ سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ میجر جنر ل حسن اظہر حیات نے کہا کہ شمالی وزیرستان میں ضرب عضب کے دوران 1588 دہشت گردوں نے ہتھیار ڈالے ، شمالی وزیرستان میں مکمل امن آگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزیرستان ایجنسی میں مختلف ترقیاتی منصوبوں پر کام مکمل ہونے والا ہے جبکہ آپریشن کے دوران نقل مکانی کرنے والے قبائیلیوں میں سے 94 فیصد واپس آچکے جبکہ شمالی وزیرستان کے 84 فیصد متاثر اپنے گھروں کو واپس آگئے۔

میجرجنرل حسن اظہر نے کہا کہ قبائلی علاقے کا 95 فیصد جبکہ شمالی وزیرستان کا 80 فیصد علاقہ کلیئر ہوچکا ہے جبکہ مستقل امن و امان کے لیے غلام خان بارڈرکھولنےکی منصوبہ بندی کی جارہی ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق بریفنگ میں کہا گیا کہ پاک افغان سرحدپر ایک ہزار 113 پوسٹیں قائم کی گئی ہے تاکہ دہشت گردوں کی نقل وحرکت کو روکا جاسکے، طالبان کی 113 سے زائد پناہ گاہیں مکمل تباہ کردی گئیں ہیں۔

Please follow and like us:

Comments

comments

Share.

About Author

Leave A Reply