تیس ستمبرکا جلسہ کرپشن کے خاتمے کیلئے سنگ میل ثابت ہوگا،میاں مقصوداحمد

0

جماعت اسلامی کے صوبائی امیرمیاں مقصود احمد نے کہا ہے کہ 30ستمبر کوفیصل آبادمیں کرپشن کے خلاف جماعت اسلامی کا جلسہ پاکستان میں کرپشن کے خاتمہ کا سنگ میل ثابت ہوگا،ضلعی انتظامیہ کی طرف سے اجازت نہ دینے کی اطلاعات افسوس ناک ہیں،ضلعی انتظامیہ شاہ کی وفادار بننے کی کوشش نہ کریں ، جماعت اسلامی کے کارکن ہمیشہ پر امن رہے ہیں،اشتعال نہ دلایا جائے ، حکومتی ٹولے کی کرپشن نے قوم کو حکمرانوں کے خلاف سڑکوں پر آنے پر مجبور کردیا ہے، جماعت اسلامی عدالتوں کے اندر اور باہر کرپشن کے خلاف جنگ لڑرہی ہے،جب تک لٹیروں کے پیٹ پھاڑ کر قومی خزانے سے لوٹی گئی ایک ایک پائی وصول نہیں کرلیتے چین سے نہیں بیٹھیں گے ۔حکمران اگر ایوان کے اندر کرپشن کے خلاف کوئی نظام نہیں بننے دیں گے تو عوام چوکوں اور چوراہوں میں لٹیروں کا محاسبہ کریں گے ، اگر حکمران مسائل کو چوکوں اور چوراہوں میں حل کرنے پر بضد ہیں تو ہم ان کا یہ چیلنج قبول کرتے ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے المرکز الاسلامی چنیوٹ بازار میں ضلعی امیر سردار ظفر حسین،جلسہ آرگنائزنگ کمیٹی کے چیئرمین رانا وسیم ایڈووکیٹ،عظیم رندھاوا ، اکرم کھرل،رانا عدنااور دیگر کے ہمراہ پرس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

انہوں نے کہا کہ دشمن جنگ کی تیاریوں کر رہا ہے جبکہ ہمارے حکمران دونوں ہاتھوں سے دولت سمیٹنے میں مصروف ہیں، حکمرانوں نے ملک میں ظلم و جبر کا نظام قائم کررکھا ہے ،عوام بنیادی سہولتوں سے محروم اور حکمران عوام کے ٹیکسوں پر عیش و عشرت کے مزے لوٹ رہے ہیں ۔ جماعت اسلامی اقتدار میں آکر ظلم و جبر اور کرپشن کے سارے دروازے بند کردے گی جماعت اسلامی نے کرپٹ نظام کوجڑ سے اکھاڑنے کے لیے کرپشن فری پاکستان مہم کا آغاز کیا ہے ، سراج الحق کی قیادت میں کرپشن فری پاکستان تحریک کو ہر پاکستانی کے دل کی آواز بنائیں گے۔

میاں مقصود احمد نے کہا کہ وطن عزیز میں ہر طرف دہشت گردی ہے،سیاسی دہشت گردی اورمعاشی دہشت گردی ہے ،پیسے کے بل بوتے پر لوگ سیاست کرتے ہیں اور حکومتوں میں آتے ہیں۔ہم نے ان تمام دہشت گردیوں کے خلاف تحریک شروع کررکھی  ہے جسے عوامی طاقت سے کامیاب کروایا جائے گا۔۔

انہوں نے کہا ہے کہ جماعت اسلامی ملک میں اسلامی انقلاب کیلئے کوشاں ہے اور ہماری ساری جدوجہد کا مقصد عام آدمی کے حقوق کا تحفظ ہے ۔جب تک عام آدمی کو اس کے حقوق نہیں ملیں گے معاشرے میں بڑھتی ہوئی بے چینی اور بدامنی کا خاتمہ نہیں ہوسکتا۔ کرپٹ اور بدیانت حکمران مسلسل قومی خزانے کو لوٹ رہے ہیں انہیں چور اور ڈاکو تو کہا جاسکتا ہے حکمران کسی صورت تسلیم نہیں کیا جا سکتا،عوام کو تعلیم صحت اور روزگار کے مواقع ملیں تو آئین شکنی خود بخود ختم ہوجائے گی۔

انہوں نے کہاکہ الطاف حسین نے پاکستان مخالف نعرے لگا کر اس بات پر مہر ثابت کردی ہے کہ جو بات جماعت اسلامی گذشتہ تین دہائیوں سے ایم کیو ایم سے متعلق کرتی آئی ہے وہ سچ ہے۔ملک میں انڈین لابی سرگرم ہے اسمبلیوں میں بیٹھ کر بھارت سے وفا کرتے ہوئے پاکستان کی پیٹھ میں چھرا گھونپا جارہاہے۔ بھارت کی فنڈنگ پر پلنے والے بھارت کے ایجنڈے پر عمل پیرا ہیں۔انہوں نے کہا کہ کراچی کے عوام ہر لحاظ سے مظلوم ہیں ،ایم کیو ایم نے ہمیشہ ان کی تمنائوں اور ارمانوں کا خون کیا۔الطاف حسین اور اس کے ٹولے نے ہر بار کراچی کے مینڈیٹ کی آڑ میں کراچی کو تاریکیوں میں ڈبونے کی کوشش کی ۔

Share.

About Author

Leave A Reply